menu icon

اسٹیڈیم میں بھگڈر مچانے والے ،حکومت نے اہم حکم جاری کردیا

فیفا کے صدر نے اس سانحہ کو فٹ بال کے لیے "سیاہ دن" قرار دیا لیکن حکام کی جانب سے کسی بھی کارروائی کا مطالبہ کرنے سے گریز کیا۔
web desk dharti ویب ڈیسک


ڈیلی دھرتی (ویب ڈیسک)انڈونیشیا کی حکومت نے پیر کو ملک کی پولیس سے مطالبہ کیا کہ وہ کسی بھی شخص کی شناخت کرے اور سزا دی جائے جو اسٹیڈیم میں بھگدڑ کا ذمہ دار تھا جس میں 125 افراد ہلاک ہوئے تھے،

جیسا کہ فٹ بال کی تاریخ کی سب سے مہلک آفات میں سے ایک پر غصہ پایا جاتا ہے۔

ہفتہ کی رات ملنگ شہر میں پیش آنے والے اس سانحے میں 323 افراد زخمی ہوئے جب افسران نے بھرے اسٹیڈیم میں پچ پر حملے کو روکنے کے لیے آنسو گیس فائر کی، جس سے بھگدڑ مچ گئی۔

ہم قومی پولیس سے آئندہ چند دنوں میں جرائم کا ارتکاب کرنے والے مجرموں کو تلاش کرنے کے لیے کہتے ہیں،” انڈونیشیا کے چیف سیکورٹی منسٹر محمود ایم ڈی نے ایک نشریاتی بیان میں یہ بتائے بغیر کہا کہ وہ کس کا حوالہ دے رہے ہیں۔

“ہم نے ان سے کہا کہ وہ انکشاف کریں کہ کس نے جرائم کا ارتکاب کیا ہے اور ان کے خلاف کارروائی کی جانی چاہیے اور ہمیں یہ بھی امید ہے کہ نیشنل پولیس ان کے حفاظتی طریقہ کار کا جائزہ لے گی،” انہوں نے تحقیقات کے لیے ایک ٹاسک فورس تشکیل دینے کا اعلان کرتے ہوئے مزید کہا۔

یہ واقعہ اس وقت سامنے آیا جب گھریلو ٹیم اریما ایف سی کے شائقین نے اپنے تلخ حریف پرسیبا سورابایا سے 3-2 سے ہارنے کے بعد کانجوروہان اسٹیڈیم کی پچ پر دھاوا بول دیا۔

پولیس نے بھری چھتوں پر آنسو گیس کی گولیاں چلا کر جواب دیا، جس سے تماشائیوں کو بڑے پیمانے پر چھوٹے دروازوں کی طرف بھاگنے پر مجبور کیا گیا جہاں گواہوں کے مطابق، بہت سے لوگوں کو روند دیا گیا یا دم گھٹ گیا تھا۔

پولیس نے اس واقعے کو فساد قرار دیا جس میں دو اہلکار مارے گئے لیکن زندہ بچ جانے والوں نے الزام لگایا کہ انہوں نے حد سے زیادہ رد عمل کا مظاہرہ کیا اور ایک پانچ سالہ لڑکے سمیت متعدد تماشائیوں کی موت کا سبب بنی۔

“ہمارا ایک پیغام حکام کے لیے ہے کہ وہ اس (واقعہ) کی مکمل تحقیقات کریں۔ اور ہم احتساب چاہتے ہیں، قصوروار کون ہے؟”

 

 

 

 

 

 

انہوں نے کہا کہ ہم اپنے گرے ہوئے حامیوں کے لیے انصاف چاہتے ہیں۔

متعلقہ خبریں









مزید

کھیل

پاکستان کو انگلینڈ سے جیت کے لیے مزید کتنے رنز درکار ہیں ؟











تجارت

گوگل پلے اسٹور کی سروسز پاکستان میں بند ہونگی یا نہیں ؟ فیصلہ ہوگیا











دلچسپ

” میرا دل یہ پُکارے آجا ” مسٹربین بھی اسی بُخار میں مبتلا












وڈیوز

وڈیوز

افواجِ پاکستان کی قربانیوں پر قوم کے جذبات

وڈیوز

غربت اور بیماری میں بچوں کی پرورش کرتی باہمت خاتون

وڈیوز

ابھی نندن پرکلی کی مزاحیہ نظم


لاہور میں باپ کی بیٹی سے نکاح کی خواہش

فارن فنڈنگ کیس : خان صاحب انصاف کے لیے عوام میں نکل آئے

جشن آزادی پر محرم الحرام کے احترام میں کاروبار میں مندی کا رجحان

چیل گوشت کا صدقہ دینا حلال ہے یا حرام ؟

بجلی کے بل دیکھ کر عوام کی چیخیں نکل گئیں

محبت کی شادی کا خوفناک انجام


مزید دیکھیں