menu icon

اسقاط حمل پر پابندی، امریکہ میں ہنگامے پھوٹ پڑے

ڈیلی دھرتی (انٹرنیشنل ڈیسک) امریکی سپریم کورٹ کی جانب سے اسقاط حمل کو ممنوع قرار دیے جانے کے بعد پورے ملک میں مظاہرے پھوٹ پڑے ہیں۔ امریکی سپریم کورٹ کی
web desk dharti ویب ڈیسک


ڈیلی دھرتی (انٹرنیشنل ڈیسک) امریکی سپریم کورٹ کی جانب سے اسقاط حمل کو ممنوع قرار دیے جانے کے بعد پورے ملک میں مظاہرے پھوٹ پڑے ہیں۔

امریکی سپریم کورٹ کی جانب سے دو روز قبل دیے گئے فیصلے کے خلاف دارالحکومت واشنگٹن سمیت امریکا کے مختلف شہروں میں مظاہرے کیے جا رہے ہیں۔ ادھر امریکی صدر جو بائیڈن نے بھی فیصلے کو افسوسناک قرار دیا ہے۔ انہوں نے عدالتی فیصلے کو انتہا پسندانہ غلطی قرار دیا۔

امریکی صدر جو بائیڈن نے کانگریس کو اسقاط حمل کے مناسب طبی سہولیات کی فراہمی کے حوالے قانون سازی کرنے پر بھی زور دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگلے وسط مدتی انتخابات میں یہ فیصلہ بحث کا اہم موضوع ہو گا۔

واضح رہے کہ امریکی سپریم کورٹ نے 50 سال قبل دیے گئے اپنے ہی فیصلے کو کالعدم قرار دے کر اسقاط حمل کو غیر قانونی قرار دیا تھا۔ جس کے بعد ملک بھر میں ہنگامے پھوٹ پڑے ہیں۔

متعلقہ خبریں









مزید

کھیل

پاکستان کو جیت کے لئے کتنے رنز کا ہدف مل گیا ؟











تجارت

مرغی کے گوشت کی قیمتیں 1000 تک پہنچنے کا خدشہ ،











دلچسپ

دی لیجنڈ آف مولا جٹ ،ہمسایہ ملک میں دھوم مچانے کو تیار












وڈیوز

وڈیوز

افواجِ پاکستان کی قربانیوں پر قوم کے جذبات

وڈیوز

غربت اور بیماری میں بچوں کی پرورش کرتی باہمت خاتون

وڈیوز

ابھی نندن پرکلی کی مزاحیہ نظم


لاہور میں باپ کی بیٹی سے نکاح کی خواہش

فارن فنڈنگ کیس : خان صاحب انصاف کے لیے عوام میں نکل آئے

جشن آزادی پر محرم الحرام کے احترام میں کاروبار میں مندی کا رجحان

چیل گوشت کا صدقہ دینا حلال ہے یا حرام ؟

بجلی کے بل دیکھ کر عوام کی چیخیں نکل گئیں

محبت کی شادی کا خوفناک انجام


مزید دیکھیں